.

.
تازہ ترین
کام جاری ہے...

سونے کی شرٹ پہننے والاہندوستانی تاجر

سوموار, اگست 11, 2014
ممبئی : کہتے ہیں شوق سب سے بڑی چیز ہوتی ہے اور اسے پورا کرنے کے لئے انسان کچھ بھی کرنے کو تیار ہو جاتا ہے۔ ممبئی کےایک کپڑا تاجر نے اپنے گولڈ کے شوق کو پورا کرنے کے لئے سونے کی شرٹ ہی بنوا ڈالی۔ شرٹ بھی عام کپڑے جتنی وزن کے برابر نہیں بلکہ 4 کلوگرام سے زائد کی۔ مارکیٹ میں اس قمیص کی قیمت تقریبا 1 کروڑ، 16 لاکھ بتائی جا رہی ہے۔
ممبئی کے معروف ارب پتی کپڑا تاجر پنکج پرکھ کو گولڈ کا بہت شوق ہے۔ اپنے اسی شوق اور لوگوں کو اپنے دولتمند ہونے کے بارے میں بتانے کے لیے انہوں نے چار کلوگرام سے زیادہ وزن کی سونے کی شرٹ بنوا ڈالی۔ لیکن جب پنکج اس شرٹ کو پہن کرگھر سے باہر نکلتے ہیں تو انہیں اپنے ساتھ باڈی گارڈ لے کر چلنا پڑتا ہے۔ پنکج نے جمعہ کو اپنا 45 واں یوم پیدائش منایا ہے۔
جمعرات کو پنکج ممبئی کے سددھونايك مندر پوجا کرنے کے لئے گھر سے نکلے تو انہوں نے گولڈ کی یہ شرٹ پہنی ہوئی تھی۔ اس دوران ان کے ساتھ چار باڈی گارڈ بھی تھے۔ پنکج کا کہنا ہے کہ مندر جاتے وقت وہ کچھ مختلف پہننا چاہتے تھے اس لئے انہوں نے گولڈ کی شرٹ پہنی۔ انہوں نے کہا کہ گولڈ کا شوق انہیں پانچ سال کی عمر سے ہے، جب وہ اسکول میں پڑھتے تھے اورسال بہ سال یہ شوق بڑھتا چلا گیا۔ پنکج نے کہا کہ وہ جب بھی کہیں جاتے ہیں تو 2-3 کلو گولڈ سے کم لے کر نہیں چلتے۔
45 سال کے اس کپڑا تاجر کے گولڈ کے شوق کا اندازہ اسی بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ انہوں نے 23 سال پہلے اپنی شادی میں اپنی بیوی سے زیادہ گولڈ پہنا ہوا تھا۔

0 تبصرے:

ایک تبصرہ شائع کریں

اردو میں تبصرہ پوسٹ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کر دیں۔